Site icon Peshawar Digital

خطہ تیزی سے تبدیلیوں سے گزر رہا ہےپاکستان فائدہ اٹھا سکتا ہے،صدر مملکت عارف علوی

ایف پی سی سی آئی 45ویں ایکسپورٹ ایوارڈز میں بڑے ایکسپورٹرز کو صدر پاکستان ڈاکٹر عارف علوی نے اعلی اعزازات سے نوازا

اسلام آباد(ویب ڈیسک)صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے 45ویں ایف پی سی سی آئی ایکسپورٹ ایوارڈز سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آج پاکستان کو اپنے سیلاب سے متعلق مسائل پر قابو پانا ہے اور معاشی ترقی کو درست سمت میں لے کر جانا ہے اور ہمیں پوری امید ہے کہ ہم اپنی آنے والی نسلوں کو ایک بہتر پاکستان دیں گے۔ انہوں نے مزید کہا کہ یہ اس حقیقت پر مبنی ہے کہ ہمارا خطہ دنیا میں تیزی سے تبدیلیوں سے گزر رہا ہے،جس سے پاکستان فائدہ اٹھا سکتا ہے۔ مشکل حالات کے باوجود، ہماری تاجر برادری بڑی تندہی سے اپنا کاروبار جاری رکھے ہوئے ہے اور ملک کی برآمدات بڑھانے کے لیے دن رات کام کر رہے ہیں۔ ڈاکٹر علوی نے کہا کہ آپ کی محنت کی بدولت مالی سال 2022میں پاکستان کی برآمدات 31 بلین ڈالر سے تجاوز کر گئی ہیں۔اس موقع پر صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے رواں سال بہترین برآمد کنندگان میں بہترین کارکردگی پر ایوارڈز تقسیم کئے۔ ایف پی سی سی آئی کے صدر عرفان اقبال شیخ، سابق صدور میاں انجم نثار اور سینیٹر حاجی غلام علی بھی اس موقع پر موجود تھے۔ عرفان اقبال شیخ نے کہا کہ ہمیں خوشی ہے کہ پاکستان معاشی ترقی، خوشحالی اور استحکام کی طرف بڑھ رہا ہے اور خطے کی معاشی طاقتوں میں سے ایک بن کر ابھرے گا۔ انہوں نے مزید کہا کہ جیسے ہی افغانستان تعمیر نو کا عمل شروع کرتا ہے؛ پاکستان کو معاشی فوائد حاصل کرنے کے لیے تیار رہنا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ بز نس کمیونٹی میں سی پیک کے ثمرات سے بہتر فائدہ اٹھانے کی بڑی صلاحیت موجود ہے۔صدرایف پی سی سی آئی نے مزید کہا کہ ہمیں برآمدات کے لیے روایتی مصنوعات اور منڈیوں سے آگے بڑھنے کی ضرورت ہے اور خطے میں رونما ہونے والی تبدیلیوں سے بھرپور فائدہ اٹھانا۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کو اقتصادی پالیسی سازی میں فیڈریشن آف پاکستان چیمبرز آف کامرس اینڈ انڈسٹری کو نظر انداز نہیں کرنا چاہیے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہم نے کئی بار کہا ہے کہ نئے ٹیکس لگانے اور موجودہ ٹیکسوں کو بڑھانے سے پہلے ایف پی سی سی آئی سے مشورہ کیا جانا چاہیے۔ انہوں نے زور دیا کہ حکومت وفاق کو اعتماد میں لے اور بتائے کہ اسے کتنا ٹیکس درکار ہے۔ ایف پی سی سی آئی اور پاکستان کی تاجر برادری ٹیکس کے اہداف کو پورا کرنے میں حکومت کی مدد کرے گی۔عرفان اقبال شیخ نے مزید کہا کہ صنعت و تجارت کے مسائل کو حل کرنے کی اشد ضرورت ہے اور کاروبار کے لیے سازگار ماحول فراہم کیا جانا چاہیے۔ کھانے پینے کی اشیا جن پر پابندی نہیں ہے انہیں برآمد کرنے کی اجازت دی جائے۔ایف پی سی سی آئی کے سابق صدر میاں انجم نثار نے اپنے خطاب میں کہا کہ تمام تر مشکلات کے باوجود ایکسپورٹرز ملک کی ترقی کے لیے محنت کر رہے ہیں۔ چین میں کاروبار کرنے کی لاگت میں اضافے کی وجہ سے وہاں کاروبار کرنا بہت مشکل ہو گیا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ اگر حکومت پاکستان کاروبار کرنے کی لاگت میں کمی کی سہولت فراہم کرتی ہے تو چین سمیت کئی ممالک کی کمپنیاں پاکستان میں سرمایہ کاری کریں گی اور پاکستان کی معیشت بہت بہتر ہو جائے گی۔ میاں انجم نثار نے مزید کہا کہ حکومتی اقدامات اچھے ہیں؛ لیکن دوسری طرف بہت سے پالیسی اقدامات کی وجہ سے کاروباری برادری کو بھی مشکلات کا سامنا ہے جس پر حکومت کو سنجیدگی سے نظر ثانی کرنی چاہیے۔اپنے خطاب میں ڈاکٹر عارف علوی نے کہا کہ مجھے خوشی ہے کہ ایف پی سی سی آئی ایک ایسا ادارہ ہے جو کئی دہائیوں سے پاکستان کی برآمدات کے فروغ کے لیے اپنا کردار ادا کر رہا ہے اور اس نے اپنے پلیٹ فارم کے ذریعے پاکستان کی کاروباری برادری کو جوڑکر رکھا ہوا ہے۔صدر علوی نے مزید کہا کہ پاکستان ایک انتہائی اہم جغرافیائی مقام پر واقع ہے اور جنوبی ایشیا، وسطی ایشیا اور مغربی ایشیا سے جڑا ہوا ہے۔ انہوں نے کہا کہ وہ سمجھتے ہیں کہ ہماری تاجر برادری کو اپنی تجارت اور برآمدات کو فروغ دینے کے لیے اس منفرد مقام سے فائدہ اٹھانے کی ضرورت ہے۔انہو ں نے کہا کہ حکومت ایس ایم ایز کے مسائل سے پوری طرح آگاہ ہے اور اسے کاروباری برادری کے لیے سازگار ماحول فراہم کرنا چاہیے۔ڈاکٹر عارف علوی نے زور دیا کہ ہم پاکستان کو ایک پرکشش اور پرامن ملک بنانا چاہتے ہیں اور ہم ہمیشہ اعلی تجارتی ادارے یعنی ایف پی سی سی آئی کی تجاویز اور تجاویز پر غور کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ معیشت کی بحالی حکومت کی اولین ترجیح ہے اور ہمیں برآمدات میں اضافے اور اقتصادی ترقی کو تیز کرنا چاہیے۔ انہوں نے مزید کہا کہ اگر ہم اس ملک سے بے ایمانی اور کرپشن کا خاتمہ کر سکتے ہیں تو پاکستان کو عالمی برادری میں اس کا جائز مقام ملے گا۔انہوں نے ایف پی سی سی آئی کے تمام 45ویں ایکسپورٹ ایوارڈ کی ٹرافی جیتنے والوں کو مبارکباد دی۔ یہ بات قابل ذکر ہے کہ ریلائنس پیٹرو کیم انڈسٹریز، پاک عرب ریفائنری اور شان فوڈز نے پاکستان کے تین ٹاپ ایکسپورٹ ایوارڈز اپنے نام کیے۔ایف پی سی سی آئی ادارے کی سینئر قیادت کو انتہائی کامیاب، بڑی تعداد میں کاروباری برادری کی شرکت اور غیر معمولی اہمیت کے حامل 45ویں ایکسپورٹ ایوارڈز کی تقسیم کی تقریب پر مبارکباد پیش کرتا ہے۔

Exit mobile version